ايک آرزو


دنيا کي محفلوں سے اکتا گيا ہوں يا رب

کيا لطف انجمن کا جب دل ہي بجھ گيا ہو

شورش سے بھاگتا ہوں ، دل ڈھونڈتا ہے مير

ايسا سکوت جس پر تقرير بھي فدا ہو

مرتا ہوں خامشي پر ، يہ آرزو ہے ميري

دامن ميں کوہ کے اک چھوٹا سا جھونپڑا ہ

Continue Reading

Advertisements